مینٹس جھینگے کا گھونسا گولی جتنا طاقتور کیوں ہوتا ہے؟ ماہرین نے راز فاش کردیا

سنگاپور: 

سمندر میں پایا جانے والا ایک خاص جھینگا مینٹس شرمپ اپنے زوردار گھونسے کی وجہ سے بہت مشہور ہے۔ بعض ماہرین کے مطابق شرمپ پوائنٹ ٹو ٹو گولی جیسا زوردار پنچ مارتا ہے۔ اب ماہرین نے اس کی وجہ دریافت کرلی ہے۔

اس قوت سے وہ پانی میں دشمن کا خول بھی توڑ ڈالتا ہے اور اس کے گھونسے کی رفتار 23 میٹر فی سیکنڈ تک ہوسکتی ہے۔ اس پر نانیانگ ٹیکنالوجیکل یونیورسٹی سنگاپور کے ماہر ڈاکٹر علی مسریز نے شرمپ کی سلوموشن ویڈیو بنائی ہیں اور دیگر ٹیکنالوجی استعمال کرکے بتایا کہ پہلے کیڑا پہلے اپنے بازو کو کسی کمان میں لگے تیر کی طرح کھینچتا ہے اور اس کے بعد پوری توانائی سے گھونسہ مارتا ہے۔

علی مسریز اور ان کے ساتھیوں نے شرمپ کے بازو کی طرح سرامک اور بائی پالیمرز سے مختلف اشکال تیار کی ہیں۔ اس کے بعد کمپیوٹر ماڈلوں سے اس پر تحقیق کی ہے۔ ان کے مطابق شرمپ کے بازو کی دو ساختیں ہیں جب جھینگا اسے موڑتا یا سکیڑتا ہے تو اوپر کی ساخت بھنچتی ہے اور نیچے والا حصہ کھنچتا ہے۔ اس عمل میں اس کے بازو میں زبردست قوت بھرجاتی ہے۔

اب جیسے ہی شرمپ اپنا بازو کھولتا ہے وہ برق رفتاری اور قوت کے ساتھ اس کے دشمن جانور یا شکار کو لگتا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ وہ کئی سمندری جانوروں کا خول تک توڑ ڈالتا ہے۔  ماہرین کے مطابق اس عمل میں ایک شدید دھچکا یا شاک ویو بھی پیدا ہوتی ہے۔

اس تحقیق کے بعد میساچیوسیٹس انسٹی ٹیوٹ آف ٹیکنالوجی (ایم آئی ٹی) میں مائیکروروبوٹس کے ماہر ڈاکٹر منگ ڈاؤ کہتے ہیں کہ مینٹس شرمپ پر غورکے بعد ہم ایسے مفید روبوٹ بھی بناسکیں گے جو بہت اہم کام انجام دے سکیں گے۔ یہ جانور اپنے بازو سکیڑتے وقت اسپرنگ کی طرح اس میں قوت جمع کرتا ہےاور پھر اس توانائی کو خارج کرتا ہے۔

Share this on...Share on FacebookEmail this to someonePrint this page

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

گذشتہ شمارے